معروف امریکی جریدے کے سرورق پر مودی کی تصویر متنازع عنوان کے ساتھ شائع

واشنگٹن: معروف امریکی جریدے ‘ٹائم’ نے اپنے نئے شمارے کے سرورق پر بھارتی وزیراعظم کی تصویر متنازع عنوان کے ساتھ شائع کردی۔

ٹائم نے اپنے نئے شمارے کے سرورق پر مودی کی تصویر کے ساتھ ‘انڈیاز ڈیوائڈر انچیف’ یعنی ‘بھارت کو تقسیم کرنے والی سب سے بڑی شخصیت’ کی سرخی لگائی ہے۔

امریکی میگزین کے سرورق پر موجود شہ سرخی جریدے میں موجود ایک مضمون سے متعلق ہے جس میں مصنف نے بھارتی سیاست پر اپنے خیالات کا اظہار کیا ہے۔

مضمون کی شہ سرخی بھی دلچسپ ہے جس میں مصنف نے سوال پوچھا ہے کہ کیا دنیا کی سب سے بڑی جمہوریت مزید پانچ سال مودی حکومت کو برداشت کرنے کی متحمل ہوسکتی ہے؟

مضمون میں سابق بھارتی وزیراعظم جواہر لال نہرو کے سیکولر نظریات اور نریندر مودی کے نظریات کا موازنہ بھی کیا گیا ہے۔

میگزین میں مودی کے بطور وزیراعلیٰ گجرات میں ہونے والے فسادات کا تذکرہ بھی کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ بھارت میں ان دنوں لوک سبھا انتخابات کا عمل جاری ہے، ایسے موقع پر میگزین کے متنازع ٹائٹل نے سوشل میڈیا پر بحث چھیڑ دی ہے۔

ایک طرف سوشل میڈیا پر اس عنوان پر تنقید کی گئی ہے تو اس کی حمایت میں بھی بہت سے لوگوں نے اظہار خیال کیا ہے۔

اسی شمارے کے ایک اور مضمون میں مودی کی اب تک کی کامیابیوں کا ذکر کرتے ہوئے انہیں اقتصادی اصلاحات کیلئے بھارت کی بہترین امید بھی قرار دیا گیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں