دو ماہ میں تیل کی قیمت بلند ترین سطح پر

عالمی منڈی : خام تیل کی قیمت میں گزشتہ ایک ہفتے کے دوران چار فیصدسے زائد کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا، اورقیمت تریسٹھ ڈالر کے قریب ہے جو کہ دو ماہ کی بلند ترین سطح ہے۔

تفصیلات کے مطابق اوپیک ممالک کی جانب سے پیداوار میں کمی کا عندیہ دے دیا ہے ، جسکی وجہ سے عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمت دو ماہ کی بلند ترین سطح پر آگئی۔

ایشیائی منڈیوں میں کاروباری ہفتے کے اختتام پر امریکہ خام تیل کی قیمت میں چار اعشاریہ تین فیصد اضافے ہوا جس کے ساتھ خام تیل کی قیمت تیرپن ڈالر اسی سینٹ فی بیرل ہوگئی ہے جبکہ برینٹ خام تیل کی قیمت میں ڈھائی فیصد اضافہ ہوا اور برینٹ خام تیل کی قیمت باسٹھ ڈالر ستر سینٹس فی بیرل ہوگئی۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ خام تیل کی طلب کے باعث قیمت میں اضافے کا رجحان رہے گا۔

پچھلے سال دسمبر میں خام تیل کی قیمت سال کی کم ترین سطح پر آگئی تھی اور چوبیس گھنٹوں میں عالمی منڈی میں خام تیل ساڑھے تین ڈالر فی بیرل سستا ہوگیا تھا۔

گزشتہ برس اکتوبر میں عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمت 4 سال کی بلند ترین سطح پر پہنچی تھی اور قیمت 85 ڈالر فی بیرل کے قریب جا پہنچی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں